Daily Systematic Metro EPaper News National and International Political Sports Religion
اہم خبریںسائنس اور ٹیکنالوجی

سولر پینلز اب چاند کی روشنی میں بھی بجلی پیدا کریں گے، نئے شمسی ماڈیولز متعارف

سولر پینلز اب صرف سورج کی روشنی سے نہیں بلکہ چاند کی روشنی میں بھی بجلی پیدا کریں گے۔

ایلون مسک نے ٹیسلا لونا روف کے نئے شمسی ماڈیولز متعارف کروادیے ہیں اور مصنوعی ذہانت سے بنے یہ سولر پینلز اندھیرے میں بھی بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت کے حامل ہیں۔

اسٹینفورڈ یونیورسٹی نے مصنوعی ذہانت کے روبوٹ ہرمیون جی کو استعمال کرتے ہوئے مصنوعی کرونولیسٹ کرسٹل سے بنائے گئے شمسی خلیات کے لیے نئی کوٹنگ تیار کی ہے جو ٹرا وائلٹ اور انفراریڈ میں فوٹون کو جذب کرنے کی اجازت دیتی ہے اورچاند کی روشنی میں بھی بجلی پیدا کی جاسکتی ہے۔

گزشتہ روز ایلون مسک نے امریکا کے شہر نیواڈا میں واقع ٹیسلا گیگا فیکٹری میں نئے شمسی پینلز کا اعلان کیا جو رات کے وقت بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

نئی شمسی ٹیکنالوجی ایک ایسی پیش رفت ہے جو توانائی کی منتقلی کو نمایاں طور پر تیز کرسکتی ہے،یہ خصوصی پینل سورج کی روشنی میں بجلی پیدا کرنے کے علاوہ چاند کی روشنی کو بھی بجلی میں تبدیل کر سکیں گے۔

موجوہ روایتی سولر پینلز صرف دن کے مخصوص اوقات میں شمسی توانائی پیدا کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں لیکن اب رات کے وقت بھی بجلی پیدا کی جا سکے گی۔

تحقیق کے مطابق اب تک کم از کم آدھے چاند نے قابل قبول بجلی پیدا کی ہے، اگرچاند پتلا یا کم مدت کا ہو گا تو یہ کافی نہیں، پورا چاند ہو تو نیا پینل ایک رات میں تقریباً 0.5 سے 1.2 کلو واٹ بجلی پیدا کرسکتا ہے۔

نئے پینل کے تیاری اورقیمت کے بارے میں ابھی کچھ نہیں بتایا گیا، نئے پینلز کی ترسیل کے بارے میں ایلون مسلک کو توقع ہے کہ پہلی ترسیل 2025ء کے آغاز میں ہوگی۔

Related posts

ملک کے بیشتر علاقوں میں بارش کا امکان، ندی نالوں میں طغیانی، لینڈ سلائیڈنگ کا خطرہ

Mobeera Fatima

ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ اسکواڈ میں اعظم خان کی شمولیت پر سوال اٹھنے لگے

Mobeera Fatima

عیدالاضحی 17 جون کو ہونے کا قوی امکان

Mobeera Fatima

Leave a Comment

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. قبول کریں۔ مزید پڑھیں

Privacy & Cookies Policy